Fārz kārō

Farz Kro Image

Fārz kāro tere sāth jīne ke khwāb hum ne sājāye hōn
Fārz kāro yeh khwāb bhī sāre jhūthe hum ne bātāaye hōn

Fārz kāro tere nām se subhō tere nām se shāmein kārte hōn
Fārz kāro ke kāyī kāyī roz tujhe yād bhī hum nā kārte hōn

Fārz kāro tumhein pā lene ko naflo-duāyein parhte hōn
Fārz kāro ibādātōn kā bhī dikhaāvā hī bas kārte hōn

Fārz kāro ke har mehfil mēin, zikr hum terā kārte hōn
Fārz kāro terā nām suntē hi mūnh hum phērā kārte hōn

Fārz kāro tum āssāsa merī zindagī kā
Fārz kāro terī hirōn sī hifāzat kārte hōn

Fārz kāro hum Johrī hōn, hirōn kī tijārat kārte hōn

Sāif


فرض کرو تیرے ساتھ جینے کے خواب ہم نے سجائے ہوں
فرض کرو یہ خواب بھی سارے جھوٹے ہم نے بتائیں ہوں

فرض کرو تیرے نام سے صبح تیرے نام سے شامیں کرتے ہوں
فرض کرو کے کئی کئی روز تجھے یاد بھی ہم نہ کرتے ہوں

فرض کرو تمھیں پا لینے کو نفل وُ دعائیں پڑھتے ہوں
فرض کرو عبادتوں کا بھی دکھاوا ہی بس کرتے ہوں

فرض کرو کہ ہر محفل میں، ذکر ہم تیرا کرتے ہوں
فرض کرو تیرا نام سُنتے ہی منہ ہم پھیرا کرتے ہوں

فرض کرو تم اثاثہ میری زندگی کا
فرض کرو تیری ہیروں سی حفاظت کرتے ہوں

فرض کرو ہم جوہری ہوں، ہیروں کی تجارت کرتے ہوں

سیف



Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *